سکھر میں مضر صحت کھانا کھانے سے باپ اور تین بیٹے جاں بحق

سکھر میں مضر صحت کھانا کھانے سے ایک ہی خاندان کے 4 افراد جاں بحق ہوگئے۔
دو روز قبل مضر صحت کھانا کھانے سے سکھر کی تحصیل پنو عاقل کے رہائشی اعجاز انڈھر اور ان کے 4 بیٹوں کی طبیعت خراب ہو گئی جنہیں فوری طور پر اسپتال لے جایا گیا۔اسپتال میں 2 بیٹے معین اور مجیب جاں بحق ہو گئے جب کہ کراچی منتقل کرنے کے دوران باپ اور ایک اور بیٹا دم توڑ گئے۔اعجاز انڈھر کا چوتھا بیٹا کراچی کے نجی اسپتال میں زیرِ علاج ہے، اہل خانہ کے مطابق اطلاع ملتے ہی اعجاز انڈھر کی اہلیہ شہناز کی حالت بھی غیر ہو گئی ہے۔پولیس نے بھی اس بات کی تصدیق کر دی ہے کہ زہریلا کھانا کھانے سے والد اور تین بیٹے انتقال کر گئے ہیں تاہم پولیس حکام کا کہنا ہے کہ واقعے کی ہر زاویے سے تحقیقات جاری ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں